28

لیجنڈری صداکار ضیا محی الدین کی پہلی برسی آج منائی جارہی ہے

ممتازبراڈ کاسٹر ضیا محی الدین 20 جون 1931 کو فیصل آباد میں پیدا ہوئے، انہوں نے 1949 میں گورنمنٹ کالج لاہورسیگریجویشن کیا، آسٹریلیا اورپھر انگلستان سیاعلی تعلیم حاصل کی۔
انہوں نے 1953 سے 1956 کے دوران رائل اکیڈمی آف ڈرامیٹک آرٹ لندن سیصداکاری، اداکاری اور ہدایت کاری کی تربیت حاصل کی اور طویل عرصیتک برطانیہ میں اپنی اداکاری کے جوہر دکھائیاور کئی مشہورفلموں اور ڈراموں کردارنگاری کے ذریعے لوہامنوایا۔
انہوں نے 1969 سے 1973 تک مشہورٹی وی ٹاک شو دی ضیا محی الدین شو کی میزبانی کی جس نے پاکستان میں مقبولیت کے نئے ریکارڈ قائم کیے۔
ضیا محی الدین نے پی ٹی وی سے پائل، چچا چھکن، ضیا کیساتھ اورجو جانے وہ جیتے جیسے پروگرام پیش کیے جبکہ لالی وڈ فلم مجرم کون میں اداکارہ روزینہ کیمقابل ہیروکا کرداراداکیا۔
انہوں نے 1973 سے 1977 تک پی آئی اے آرٹس اکیڈمی کے ڈائریکٹر کی ذمے داری سنبھالی جبکہ فروری 2005 میں کراچی میں نیشنل اکیڈمی آف پرفارمنگ آرٹس کی بنیاد رکھی گئی تووہ ناپا کے صدرمنتخب ہوئے۔
ضیا محی الدین کو 2003 میں حکومتِ پاکستان کی جانب سے ستارہ امتیازاور 2012 میں صدرِ پاکستان نے ہلالِ امتیاز سے نوازا جبکہ 2017 میں دبئی میں مقیم پاکستانی کمیونٹی کی جانب سیلائف ٹائم اچیومنٹ ایوارڈ سیبھی نوازا گیا۔
ضیا محی الدین نے معروف ہدایتکار ڈیوڈ لین کی فلم لارنس آف عربیہ میں ہالی ووڈ ایکٹرعمرشریف اور انتھونی کوئن کے ہمراہ کام کیا۔

لیجنڈری صداکار ضیا محی الدین کی پہلی برسی آج منائی جارہی ہے

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں